قائد۔ رہنما۔ لیڈر

 مولامدد قیزل 

قائد، رہنما، لیڈر کسی بھی قوم کی رہبری یا رہنمائی ، کرنے والا وہ عظیم انسان ہوتا ہے ، جو ایک عزم اور مقصد کے ساتھ کچھ کر دکھانے کی صلاحیت رکھتا ہو ۔اس کا مقصد حیات خدمت اور قربانی ہوتا ہے، اس کے ارادے چٹان کی طرح مضبوط ہوتے ہیں،اسکے ارادے پاک اور نیک نیتی پر مبنی ہوتے ہیں اور سوچ قوم سے شروع ہو کر قوم پر ختم ہوتی ہیں. قائد صرف ایک انفرادی شخصیت ہی نہیں بلکہ پورے عوام کا چہرہ اور ان کی پہچان ہوتا ہے۔ ایک کامیاب لیڈر میں دلیری، نظم و ضبط ،انصاف پسندی، استقلال endurance، منصوبہ بندی، محنت پسندی، خوشگوار ثخصیت، ہمدردی، جیسی خوبیاں اور صلاحیتں موجود ہو تی ہیں، ایک سچا ، امین، دیانت دار ہونے کے ساتھ ساتھ ملک و قوم کا وفادار ہوتا ہے،وہ ہر شہری ، ہر فرد ، ہر ٓادمی کا دردسینے میں لئے ہوتا ہے۔اور حقیقی معنوں میں عام انساں کو فائدہ پہنچانا چاہتا ہے، جبکہ رشوت خوری ، شفارش، کینہ، جھوٹ، فریب جیسی لعنتوں سے پاک ہوتا ہے۔ ایک اعظیم لیڈر کے بولنے میں بڑی طاقت ، الفاظ میں تاثیر اور جادو ہوتا ہے، جبکہ اس کا مزاج اسے ایسے کام کی طرف لے جاتا ہے جو ایک عام انسان کے لئے بے حد مفےد ہوتا ہے۔

جب کہ ذرا اس ملک اور اپنے علاقائی نظام کو دیکھئے یا اپنے لیڈرز  اور قائدین کا ایکسرے x-ray  کروائے پر  معلوم ہوتا ہے کہ  ہمارے ہاں لیڈرز وہ بنتے ہیں جن کے پاس دولت کی فروانی ، سرکار کی خوشنودی، کسی وزارت یا کرسی کا فضل ، غنڈوں کی رفاقت ، دوستی اور ہمدردی شامل ہو ،یا پھر جھوٹ، مکاری،  اور فریب میں ماہر ہو. اور اس کے علاوہ غریب لوگوں ، اخبار نویسوں ، tv channel کو خریدنے کی طاقت رکھتے ہوں ،

کچھ لیڈرز  خاندان یا ذریت کی طاقت سے، علاقہ یا ذبان کی بنیاد پر لوگوں کو توڈ کے ، رنگ و نسل ، ذات پات ، مذ ہب وغیرہ جیسی چیزوں کا سہارہ لے کے نام پر کرسی حاصل کرتے ہیں اور کرسی کو  اپنی زندگی کا آخری موقعہ سمجھ کر ذر، زن اور زمین کو اپنا جائیداد بنانے میں محو ہو جاتے ہیں یہاں تک کہ خوف خدا ن کے دلوں سے کوسوں دور چلا جاتا ہے۔ ستم ظریفی یہ ہے کہ ان سستی مقبو لیت کے آرز و مند لوگ جب بھی عوام کو الّو بنا کر اقتدار میں آئے شب خون مارا مگر یہ عوام ہمیشہ روتے رہے، اس قوم کی مثال اس کبوتر کی ہے جو آنکھیں بند کر کے بلی کے خوف سے آذاد ہو جاتی ہے۔ کچھ لوگ رشوت یا اثر ورسوخ سے گورنمنٹ میں ملازمت لے کے خاموش ہو جاتے ہیں تو کچھ NGOمیں اپنی روایات ، رسم و رواج بھیج کر غریبوں کی حق تلفی کر کے جائیداد بناتے ہیں، اور مجبور ، غریب اور ، شریف لوگ پستے رہتے ہیں۔

 زندہ قوموں کے قائدین کو دیکھے۔ انکے زندہ دل عوام کو دیکھیں، ذرا سوچئے، غور کیجئے اپنے دل کی دھڑکنوں پر عقل کے کان لگا کر سوچے، کچھ سکےھئے، مال و متاع اور دولت کی حرص و حوس سے نکل کر اس کا حل نکالیں ۔

آئیں۔۔ میں دعوت دیتا ہو ں  کہ ہم کسی ایسے رہنما کو چنے ، کسی ایسے قائد کو ڈھونڈے جو دلیر ہو ،جس میں نفس کی قربانی ہو ، جس میں دولت کے ایثار کا جذبہ ہو ، جس میں خدمت جذبہ ہو ، جسکی نگاہ بلند ہو، جس کے ساتھ عوام کی رفاقت ہو، جس کے دل میں مظلوم عوام کیلئے محبت و ہمدردی ہو ، جس میں اصول ، پختہ عزم ، نطم وضبط کی مثالیں ہوں ،جس کے دل و جگرمیں اس دھرتی ماں کے لئے پیار و محبت ، اورجان فشانی کا جذبہ ہو ، جس کے رگ رگ میں اس مٹی کی خوش بو رچا بسا ہو اور، جو ہماری تقدیر بدل سکے۔اور یہ جب ہی ممکن ہے جب ہم اپنی کمزوریوں کو طاقت میں بدل دے گے۔ خلوص قلب، صداقت شعاری اور دیانت داری کے بغیر یہ ممکن نہیں ، ۔

کیونکہ ہمیں آج ایک ایسا لیڈر، قیادت ، رہنما اور قائد کی ضرورت ہے جو ہمیں اس غربت، مہنگائی، ناانصافی، بے روزگاری کے دلدل سے نکال سکے،جو ہمیں غلامی کی اندھیری غار سے نکال سکے، کیونکہ ایک دلیر ، نڈر اور بے باک قیادت ہی قوم کا مستقبل سنوار سکتا ہے۔ قوم کی تقدیر بنانا اور بگاڈنا اسی کے ہاتھ ہوتا ہے۔۔ترقی اور انصاف کی فروانی کے لئے ایک دیانت دار لیڈر کامنتخب کرنا ہمارے لئے از حد ضروری ہے، جیسا کہ قول مشہور ہے کہ۔۔آدھی جنگ اچھالیڈر منتخب کر کے جیت لی جاتی ہے۔


2 Responses to قائد۔ رہنما۔ لیڈر

  1. neha says:

    great writting .. dear you are doing realy a good job.. keep it up qizill

  2. safdar khan says:

    sir whole article is amazing i appreciate it from my depth of my heart but i i think , if u infuse some ideal persolalities in this article it become more attractive and effective because for a reader it become more easy to understand when he/she saw the names of some renowed personalities…….any way ur work is really amazing

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s